Trending

Teri Umeed Tera Entzar Jab Se Ha Faiz Ahmad Faiz Urdu Hindi Poetry Lyrics

 Teri Umeed Tera Entzar Jab Se Ha

Na Shab KobDin Se Shikayet  Na Din Ko Shab Se Ha 

Kisi Ka Dard Ho Karte Hain Tere Naam Raqm

Gila Ha Ju Bhi Kisi Se Tre Sabab Se Ha

Hoa Ha Jab Se Dil Na Saboor Bey Kabu

Kalam Tujh Se Nazar Ko Bare Adab Se Ha 

Agar Sharar Ha Tu Bharke Jub Phool Ha Tu Khiley 

Trah Trah Ki Talab Tere Rang Lab Se Ha 

Kahan Gaye Shab Farqt Ke Jagne Wale

Sitarah  Sehri Hum Kalam Kab Se Ha



تری امید ترا انتظار جب سے ہے


نہ شب کو دن سے شکایت نہ دن کو شب سے ہے


کسی کا درد ہو کرتے ہیں تیرے نام رقم


 گلہ ہے جو بھی کسی سے ترے سبب سے ہے 


ہوا ہے جب سے دل نا صبور بے کا قابو 

کا


کلام تجھ سے نظر کو بڑے ادب سے ہے


اگر شرر ہے تو بھڑ کے جو پھول ہے تو کھلے 


طرح طرح کی طلب تیرے رنگ لب سے ہے 


کہاں گے شب فرقت کے جاگنے والے


ستارہ سحری ہم کلام کب سے ہے










Post a Comment

Previous Post Next Post